Main Menu

پی ایس ایل فائیو کا پاکستان میں شاندار آغاز، بدانتظامی نے رنگا رنگ افتتاحی تقریب کا مزہ کرکرا کردیا، دفاعی چمپئن کوئٹہ کا فاتحانہ آغاز

کراچی(جیت پاکستان) شائقین کرکٹ کے لیے انتظار کی گھڑیاں ختم ہوگئیں، پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) فائیو کا میلہ سج گیا، افتتاحی میچ میں دفاعی چمپئن کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے اسلام آباد یونائیٹڈ کو شکست دے دی۔ 

پی ایس ایل فائیو 2020 کا باقاعدہ آغاز رنگا رنگ افتتاحی تقریب سے ہوگیا۔ تاہم پی ایس ایل انتظامیہ کی ناقص منصوبہ بندی کے باعث شائقین کو میچ کے آغاز کے لئے مزید آدھے گھنٹے تک انتظار کی سولی پر لٹکنا پڑا۔

افتتاحی تقریب میں پی ایس ایل انتظامیہ کی ناقص حکمت عملی نے شائقین کرکٹ اور کرکٹ پر گھری نظر رکھنے والوں کو خاصا مایوس کیا۔

سینئر اسپورٹس اینکر اور پاکستانی کرکٹ کے وکی پیڈیا مرزا اقبال بیگ نے ٹویٹر کے ذریعے پی ایس ایل فائیو کی تقریب میں بدانتظامی پر انتظامیہ کو ادھیڑ کر رکھ دیا۔

اسپورٹس جرنلزم میں منفرد مقام رکھنے والے سینئر رپورٹر سہیل عمران نے بھی تقریب کے باعث میچ میں تاخیر پر انتظامیہ کو آڑھے ہاتھوں لیا۔

اسپورٹس اینکر فضیلہ صباء نے تقریب کے میزبان کی ضرورت سے زیادہ موجودگی پر طنز کیا۔

اسپورٹس رپورٹر اور اینکر عمر فاروق نے تقریب کے کے درمیان پرفارم کرنے والے فنکار کی گمنامی پر سوال اٹھایا۔

ایک شائق نے بھی میزبان کے حوالے سے مزاحیہ انداز اپنایا۔

نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں کھیلے گئے میچ میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز  نے 3 وکٹوں سے کامیابی حاصل کرکے اپنی مہم کا کامیاب آغاز کردیا۔

پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے اسلام آباد یونائیٹڈ کی پوری ٹیم 168 رنز پر ڈھیر ہوگئی۔ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز  نے مطلوبہ ہدف 19ویں اوور میں 7 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے کپتان سرفراز احمد  نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا تو محمد نواز  نے میچ کی پہلی ہی گیند پر کولن منرو کو آؤٹ کرکے اسلام آباد یونائیٹڈ کو دباؤ کا شکار کردیا۔ ڈیوڈ ملان کے علاوہ اسلام آباد یونائیٹڈ کا کوئی بلے باز بھی خاطر خواہ کارکردگی کا مظاہرہ نہ کرسکا اور وقفے وقفے سے آؤٹ ہوکر پویلین واپس لوٹتے رہے۔ ڈیوڈ ملان  نے 40 گیندوں پر 5 چوکوں اور 3 چھکوں کی بدولت 64 رنز کی اننگز کھیلی۔ اسلام آباد یونائیٹڈ کی پوری ٹیم 19.1 اوورز میں 168 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔ محمد حسنین  نے 25 رنز کے عوض 4 اور بین کٹنگ  نے 31 رنز دے کر 3 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی۔

جواب میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی اننگز کا آغاز بھی زیادہ متاثر کن نہ رہا اور محض 26 رنز پر اس کے ابتدائی تینوں بلے باز، جیسن رائے، شین واٹسن اور احمد شہزاد، آؤٹ ہوکر پویلین واپس لوٹ گئے۔ چوتھی وکٹ کے لیے اعظم خان اور سرفراز احمد کے درمیان قائم 62 رنز کی شراکت اس وقت ٹوٹی جب کپتان سرفراز احمد 21 رنز پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے۔ اعظم خان  نے محض 28 گیندوں پر نصف سنچری مکمل کی اور 3 چھکوں اور 5 چوکوں کی مدد سے  59رنز کی برق رفتار اننگز کھیلی۔ محمد نواز 23 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔ اختتامی اوورز میں بین کٹنگ اور سہیل خان  نے بالترتیب 22 اور 18 رنز کی اننگز کھیل کر ٹیم کو فتح سے ہمکنار کردیا۔ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز  نے مطلوبہ ہدف 9 گیندیں قبل 7 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کرلیا۔ محمد  موسیٰ  نے 3 وکٹیں حاصل کیں۔

چار کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھانے پر نوجوان فاسٹ باؤلر محمد حسنین کو مین آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا۔

لیگ کے دوسرے روز 2 میچز کھیلے جائیں گے۔ پہلے میچ میں کراچی کنگز اور پشاور زلمی کی ٹیمیں نیشنل اسٹیڈیم کراچی جبکہ دوسرے میچ میں لاہور قلندرز اور ملتان سلطانز کی ٹیمیں قذافی اسٹیڈیم لاہور میں مدمقابل ہونگی۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*