Main Menu

یوم آزادی پر پاکستان ٹیم کا ہم وطنوں کے لیئے اوول کی جیت کا تحفہ! ٹیسٹ سیریز برابر ، یونس مردِ میدان

پاکستان نے انگلستان کو اوو ل ٹیسٹ میں دس وکٹوں سے شکست دیکر سیریز دو ، دو سے برابر کر لی۔دو سو اٹھارہ دوڑوں کی یادگار باری کھیلنے والے یونس خان مین آف دی میچ۔

جیسا کہ” جیت پاکستان ڈاٹ کوم“ نے اپنی جمعرات کی سٹوری میں واضح کیا تھا کہ اوول کی تاریخ پاکستان کے حق میں فیصلہ دے رہی ہے۔ پاکستان نے یہاں پچھلی تین فتوحات کی طرح ایک بار پھر یہاں ٹاس ہار ا لیکن میچ جیت لیا۔

پاکستانی ٹیم اوول میں فتح کے بعد جشن مناتے ہوئے۔ فوٹو اے ایف پی

میچ کے چوتھے رور پاکستان ٹیم جیت کا پختہ عزم لیئے میدان میں اتری۔انگلش بلے بازوں نے تھوڑی مزاحمت کی لیکن سہیل خان نے بیلنس کو آف بیلنس کر کے پاکستان کو فتح کے ایک قدم اور قریب کر دیا۔

بیرسٹو نے ا کاسی اور معین علی نے بتیس رنز کے ساتھ پاکستان کی جیت کی راہ میں کھڑا ہونے کی ناکام کوشش کی۔ وہاب ریاض نے بیئرسٹو اور ووکس کی اہم وکٹیں حاصل کر کے گوروںکی ڈوبتی کشتی میں زید سوراخ کر دیئے۔یاسر نے معین کو آﺅٹ کر کے پانچ وکٹیں مکمل کیں۔ افتخار نے آخری کھلاڑی اینڈرسن کو آﺅٹ کر کے اپنا حصہ ڈالا۔انگلش ٹیم دوسری باری میں دو سوترپن دوڑیں بنا کر آﺅٹ ہو گئی۔یاسر شاہ نے پانچ وکٹیں مکمل کیں۔


پاکستا ن کو چالیس رنز کا ہدف ملا جوسمیع اسلم اور اظہر علی نے علی الترتیب بارہ اور تیس رنز کا حصہ ڈال کر پورا کر لیا۔اظہر نے چھکا لگا کر فتح مکمل کی تو پاکستانی شائقین کرکٹ کو فخر ہوا کہ ان کی ٹیم نے انہیں چودہ اگست کے روز ایک یادگار فتح کا تحفہ دیا جس کی وجہ سے پاکستان سیریز ہارنے سے بچ گیا۔

فاتح کپتان مصباح الحق کوپاکستان کی طرف سے اور انگلستان کی طرف سے کرس ووکس کو مین آف دی سیریز کے ایوارڈ ز سے نواز ا گیا۔

مصباح نے دو سو بیاسی، اظہر دو سوپچانوے اور اسد شفیق نے دو سو چوہتر رنز بنائے۔

سمیع اسلم نے چار اننگز میں ایک سو سٹرسٹھ رنز55.56کی بہترین اوسط سے سکور کیئے۔

یونس خان سب سے زیادہ تین سو چالیس رنز بناکر پاکستان کی جانب سے ٹاپ سکورر رہے۔ گیندبازی میں

یاسر شاہ نے سب سے زیادہ انیس، سہیل خان نے تیرہ،عامر نے بارہ اور وہاب ریاض نے دس وکٹیں حاصل کیں۔

انگلستان کے لیئے سب سے زیادہ جو روٹ نے پانچ سوبارہ رنز سکور کیئے۔کرس ووکس نے سب زیادہ چھبیس وکٹیں حاصل کیں۔

میچ کا سکور یہ رہا۔

انگلستان: پہلی باری328 دوسری باری253
پاکستان: پہلی باری 542 دوسری باری42
جیت کےلئے پاکستان کا ہدف چالیس دوڑیں
نتیجہ : پاکستان دس وکٹوں سے جیت گیا۔

یاد رہے کہ پاکستان ٹیم کو لارڈز ٹیسٹ 75 رنز سے جیتنے کے بعد اولڈ ٹریفورڈ(330رنز)اور ایجبیسٹن(141رنز) ٹیسٹ میچوں میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ اوول کا میچ چار ٹیسٹ پر مشتمل سیریز کا آخری میچ تھا۔

پاکستان ٹیم اب آئرلینڈ کے خلاف اٹھارہ اور بیس اگست کو دو ایکروزہ بین الاقوامی میچ کھیلنے کے بعد چوبیس اگست سے انگلستان کے خلاف پانچ ایکروزہ میچوں پر مشتمل سیریز کا آغاز کریگی۔

y-khan-100

pakistan-won-ovel-test






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*