Main Menu

چوتھا ایکروزہ: انگلستان کی لگاتار چوتھے میچ میں کامیابی، پاکستان کو کلین سویپ کا خطرہ

انگلستان نے ہیڈنگلے لیڈز میں پاکستان کو4 وکٹوں سے شکست دیکر پانچ میچوں کی سیریز میں لگاتار چوتھی کامیابی حاصل کرلی جس سے مہمان ٹیم کے کلین سویپ ہونے کا خدشہ بڑھ گیا ہے۔

پاکستان نے انگلستان کوجیت کے لیئے248 رنز کا ہدف دیا تھا جسے میزبان ٹیم نے48 ویں اوورمیں 6بلے بازوں کی وکٹیں کھو کر پورا کر لیا۔ سٹوکس(65)وکٹ کیپر جونی بیئرسٹو(61 رنز) اور معین علی(45*) نے کامیابی میں اہم کردار ادا کیا۔

اس میچ میں پاکستان کے بلے باز ایک بار پھر جدید ایکروزہ کرکٹ کے تقاضوں پر پورا اترنے میں ناکام رہے۔ سست روی کے علاوہ وکٹ پر جم کر کھیلنے کی اہلیت کی کمی پھر آشکار ہو گئی۔

کپتان اظہرعلی اور آل راﺅنڈر عماد کے علاوہ باقی کے بلے باز ٹیم میں اپنی موجودگی کی لاج نہ رکھ سکے۔ٹیم مقررہ پچاس اوورز میں آٹھ وکٹوں پر دو سو سینتالیس رنز جوڑ سکی۔

اس میچ کے لیئے پاکستان کی جانب سے ٹیم میں ہول سیل تبدیلیاں کی گئیں۔شعیب ملک، محمد عامر ، وہاب ریاض اور یاسر شاہ کو ٹیم میں جگہ نہیں دی گئی۔ ان کی جگہ لینے والو ں میں محمد رضوان،عماد وسیم، عمرگل، اورمحمد عرفان شامل ہیں۔

پاکستان نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا جو درست ثابت نہ ہو سکا کپتان اظہر علی اور عماد وسیم مزاحمت کرتا نظر آئے۔ سمیع اسلم(24) شرجیل خان(16)حماد اعظم(12) سرفراز احمد(12) اور محمد رضوان(6)محمد نواز(12) اورحسن علی(9)وکٹ پر آئے اور چلے گئے۔

اظہرعلی(80) نےایک مرتبہ اچھی بلے بازی کی ان کی اننگز میں پانچ چوکے اور دو چھکے شامل تھے۔

عماد وسیم نےبھی اچھی باری کھیلی ، انہوں نے ناقابل شکست رہتے ہوئے اکتالیس گیندوں پر ستاون رنز بنائے جس میں سات چوکے اور ایک چھکا شامل تھا۔

انگلستان کی جانب سے عادل راشد نے تین جبکہ معین علی اور جارڈن نے دو، دو کھلاڑی آﺅٹ کیئے۔

پاکستان ٹیم سیریز کا پہلا میچ ساﺅتھمپٹن میں چوالیس دوڑوں سے ، دوسرا لارڈز میں چار وکٹوں سے اور تیسرا ٹرینٹ برج ناٹنگھم میں ایک سو انتہر دوڑوں کے فرق سے ہار کر سیریز پہلے ہی ہار چکی ہے۔

سیریز کا آخری میچ چارستمبر کو کارڈف، ویلزمیں کھیلا جائیگا۔

یہ بھی یاد رہے کہ پاکستان انگلستان کے خلاف چار ٹیسٹ میچوں کی سیریز دو، دو سے برابر کرنے میں کا میاب ہوگیا تھا جس کے بعد پاکستان عالمی درجہ بندی میں پہلے نمبر پر آگیا۔

 






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*