Main Menu

پاکستان کاسری لنکن پر آخری وار بھی کامیاب، بیس بیس مقابلوں کا سلسلہ بھی جیت لیا

 پاکستان نے سری لنکا کو ایک سنسی خیز مقابلے کے بعد ایک وکٹ سے شکست دے کر بیس بیس کرکٹ مقابلوں کی سیریز دو صفر سے جیت لی۔کولمبو میں دو ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میچوں کی سیریز کے اس دوسرے میچ میں پاکستان کی جیت میں انور علی اور عماد وسیم کی شراکت داری نے اہم کردار ادا کیا۔ انور علی نے 17 گیندوںچارچھکو ں اور تین چوکوں کی وساطت سے46 رنز بنائے جبکہ عماد وسیم نے 14 گیندوں پر 24 رنز بنائے۔سری لنکا کی جانب سے دیا گیا 173 رنز کا ہدف پاکستان نے آخری اوور کی دوسری گیند پر عماد وسیم کے زوردار چھکے کی بدولت حاصل کیا ۔انور علی کو میچ کا بہترین کھلاڑی جبکہ شعیب ملک سیریز کے بہترین کھلاڑی قرار پائے۔

پاکستان کی اننگز کا آغاز مختار احمد اور احمد شہزاد نے کیا۔ 11 کے مجموعی سکور پر شہزاد 7 رنز بنا کر بولڈ ہو گئے۔احمد شہزاد کے آو¿ٹ ہونے کے بعد 16 کے مجموعی سکور پر اوپنر مختار احمد پر چار رنز بنا کر میتھوز کا دوسرا شکار بن گئے۔دو وکٹوں کے نقصان کے بعد حفیظ اور شعیب نے سکور کو 33 رنز تک پہنچایا تو حفیظ رن آو¿ٹ ہو گئے۔ سات رنز کے اضافے پر عمر اکمل بھی رن آو¿ٹ ہو گئے۔

شعیب ملک 8 رنز بنا کر سٹمپڈ آو¿ٹ ہو گئے۔ پاکستان کا سکور جب 101 رنز پر پہنچا تو رضوان 17 رنز پر بولڈ ہو گئے۔اس موقع پرکپتان شاہد آفریدی نے لڑکھڑاتی بیٹنگ لائن کو سہارا دینے کی کوشش کی اور 22 گیندوں پر 44 رنز بنا کرمیچ میں جان ڈال دی اور پھر انورعلی اور عماد وسیم نے فتح یقینی بنا دی۔

اس سے پہلے ٹاس جیت کر پہلے کھیلتے ہوئے سری لنکا نے چھ وکٹوں کے نقصان پر 172 رنز بنائے جس میں جے سوریا 40 اور کپوگیدرا 48 رنز بنا کر نمایاں رہے۔

یاد رہے کہ پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں پاکستان نے میزبان ٹیم کو 176 رنز کا ہدف دیا تھا اور اس کے جواب میں سری لنکا کی ٹیم مقررہ 20 اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر 146 رنز بنا سکی تھی۔

اس سے پہلے پاکستان نے سری لنکا کو پانچ میچوں پر مشتمل ایک روزہ سیریز میں تین دو سے شکست دی تھی۔جبکہ مصباح الحق کی کپتانی میں پاکستان نے سری لنکا کو پانچ روزہ کرکٹ سلسلے میں بھی شکست سے دوچار کیا تھا۔

CRICKET-SRI-PAK






One Comment to پاکستان کاسری لنکن پر آخری وار بھی کامیاب، بیس بیس مقابلوں کا سلسلہ بھی جیت لیا

  1. sports says:

    good news for Pakistan

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*