Main Menu

فیڈریشن نے ورلڈ الیون کو مدعو کرکے سنہری دور واپس لانے کی کوشش کی ۔ حسن سردار، توقیر ڈار

پاکستان ہاکی فیڈریشن نے اچھا ورلڈ الیون کو پاکستان مدعو کرکے ہاکی کا سنہری دور واپس لانے کی کوشش کی ہے، پاکستان ہاکی لیگ کا انعقاد بھی ملک میں ہاکی کے فروغ میں معاون ثابت ہوگا، ملک میں ہاکی کے میلے سجتے رہے اور میڈیا انہیں کوریج دیتا رہا تو بہت جلد پاکستان کا قومی کھیل عوام کی دھڑکنوں میں بس جائے گا۔

 ان خیالات کا اظہار معروف ہاکی پلیئرز حسن سردار اور توقیر ڈار نے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ حسن سردار جو کہ حال ہی میں پاکستان کی قومی ہاکی ٹیم کے ہیڈ کوچ بنے ہیں، نے کہا کہ تمام اولمپئنز اور ہاکی لورزفیڈریشن کے اس اقدام کو دل سے سراہتے ہیں کیونکہ ہاکی کے مقابلے ہونگے تو سپانسرز اور شائقین اس کھیل پر توجہ دیں گے ۔

 ایک سوال کے جواب میں حسن سردار کا کہنا تھا کہ پاکستان ہاکی لیگ کا انعقاد بھی پاکستان کا سنہری دور واپس لانے میں معاون ثابت ہوگا۔ توقیر ڈار کا کہنا تھا کہ وہ ہر سال اپنے کلب کے ساتھ یورپ کا دورہ کرتے ہیں اور اپنے کھلاڑیوں کو بین الاقومی میچوں کا تجربہ دیتے ہیں لیکن جونیئر کھلاڑیوں کو جو تجربہ اور اعتماد پاکستان میں غیرملکی ٹیموں کے خلاف کھیل کر حاصل ہوسکتا ہے وہ کسی اور ملک میں نہیں ۔

 انہوں نے کہا کہ دو میچوں کی سیریز کےلئے پاکستان آنے والی ورلڈ ہاکی الیون کے کھلاڑیوں اور لیجنڈز پاکستان میں انٹرنیشنل ہاکی کی واپسی اور بہتری میں مدد دینے کے لئے آ ئے ہیں اس لئے ہم سب کو ان کی اس کوشش کی قدر کرنی چاہئے ۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*