Main Menu

دفاعی چیمپئن کو شکست، اسلام آباد دوسری مرتبہ فاتح سپر لیگ

دو ہزار سولہ کی چیمپئن اسلا م آباد یونائیٹڈ(154/7/16.5) دفاعی چیمپئن پشاور زلمی(148/9/29) کو شکست دے کر دوسری بار پاکستان سپر لیگ کی فاتح بن گئی۔

سپر لیگ سوئم کے فاتح کا فیصلہ اتوار کو تماشائیوں سے بھر ے ہوئے کراچی کے نیشنل کرکٹ سٹیڈیم میں ہوا جہاں اسلام آباد یونائیٹڈ نے اپنے آزمودہ کار ہتھیار افتتاحی بلے باز لیوک رونکی( 26گیندوں پر52 رنز) کی ایک اور تباہ کن باری کی بدولت فیصلہ کن معرکہ تین وکٹوں سے جیت کر ٹرافی اٹھانے کا اعزاز حاصل کیا۔

ایک سو پچپن رنز کے تعاقب میں لیوک رونکی اور صاحبزادہ فرحان(44رنز) نے نوویں اووور پہلی وکٹ پر چھیانوے رنز کا آغاز فراہم کر کے اسلام آباد کی فتح کی بڑی بنیا درکھ دی۔

 

اپنی باری میں بڑا مجموعہ حاصل نہ کرنے کے بعد زلمی نے میچ میں واپس آنے کی اچھی کوشش کی لیکن رونکی نے ابتداءمیں جو کچھ زلمی کے گیند بازوں کے ساتھ کیا تھا، آخری لمحات میں اس کی جھلک یونائیٹڈکے چھپے رستم بلے باز آصف علی() کی بلے بازی میں دیکھنے کو ملی جنہوں نے حسن علی کو لگاتار تین چھکے رسید کر میچ کی ساری سنسنی خیزی ہوا کردی۔

سپر لیگ میں چار سو سے زائد رنز بنانے والے زلمی کے کامران اکمل کا بلا فائنل میں نہ چل سکا اور اہم موقع پر انہوں آصف علی کا ایک کیچ بھی گرایاجو بعد میں کافی مہنگا ثابت ہوا۔

سپر لیگ سوئم کے فائنل کے مردِ میدان لیوک رونکی ( 182سٹرائیک ریٹس کے ساتھ435رنز)لیگ کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ پانے بھی میں کامیاب رہے۔

فہیم اشرف بہترین گیند باز، کامران اکمل(425) بہترین بلے باز، جین پال ڈومینی بہترین فیلڈر، کمارا سنگا کارا بہترین وکٹ کیپر قرار پائے۔

وزیراعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی،پی پی پی کے چیئرمین بلاول بھٹو اوروزیراعلی سندھ اور سینیٹ میں حزب اختلاف کی لیڈر شیریں رحمن نے بھی میچ دیکھا۔ تقریب تقسیم انعامات کے موقع پر گورنر سندھ محمد زیبر، گورنر خیبر پختون خوا اقبال ظفر جھگڑا بھی موجود تھے۔

فائنل سے قبل اختتامی تقریب کے موقع پر مختلف گلوکاروں نے اپنے فن کا مظاہر ہ کیا۔

 

 

 






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*