Main Menu

ہاکی کے کھلاڑیوں کی ایشیائی کھیلوں کے بائیکاٹ کی دھمکی کام دکھا گئی

پاکستان کی قومی ہاکی ٹیم کے کھلاڑیوں کی جانب سے واجبات کی عدم ادائیگی پر آنے والی ایشین گیمز کے بائیکاٹ کی دھمکی کام کر گئی اور پاکستان ہاکی فیڈریشن نے کھلاڑیوں کو ڈیلی الاونس سمیت تمام واجبات ادا کرنے کی حامی بھر لی۔
میڈیار پورٹس کے مطابق رواں برس اٹھارہ اگست سے دو ستمبر تک ملائیشیا میں منعقد ہونے والی ایشیائی کھیلوں کے لیئے جیسے ہی چیف سلیکٹر اصلاح الدین نے پاکستان کے 18رکنی سکواڈ کا اعلان کیا تو کپتان رضوان سینئر اور پوری ٹیم نے میڈیا کے ذریعے اعلان کردیا کہ جب تک کھلاڑیوں کو پچھلے چھ ماہ کے واجبات کی مکمل ادائیگی نہیں کی جاتی ایشین گیمز میں حصہ نہیں لیں گے
رضوان سنیئر کے مطابق ایک کھلاڑی کے کم از کم واجبات 8 لاکھ روپے سے زائد بنتے ہیں۔
پاکستان ہاکی فیڈریشن کے صدر بریگیڈیئر ریٹائرڈ خالد سجاد کھوکھر نے کھلاڑیوں کی جانب سے بائیکاٹ کے اعلان کا فی الفور نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ اگرچہ پی ایچ ایف کے لیے منظور شدہ 20 کروڑ روپے کی گرانٹ اب تک نہیں ملی لیکن اگر گرانٹ نہیں بھی ملی تو وہ ذاتی حیثیت میں کھلاڑیوں کے واجبات ادا کریں گے۔
پاکستانی سکواڈ کپتان رضوان سینئر، عمران بٹ(گول کیپر)، امجد علی، عرفان جونیئر، مبشر، فیصل قادر، راشد، عماد شکیل بٹ، تصور عباس، عمر بھ±ٹہ، شفقت رسول، توثیق، اعجاز، ابوبکر، عتیق ارشد، علی شان، دلبر اور جنید منظور پر مشتمل ہے۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*