Main Menu

مثبت ڈوپ ٹیسٹ: احمد شہزاد سے محکمانہ ٹیم کی کپتانی چھن گئی

ممنوعہ ادویات کے استعمال کے جرم کی پاداش میں معطل افتتاحی بلے باز احمد شہزاد کو ان کے محکمے حبیب بنک نے ٹیم کی قیادت کے منصب سے الگ کر دیا ہے۔حبیب بنک کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ جب تک وہ اپنا نام کلیئر نہیں کرواتے،انہیں دو ہزار اٹھارہ اور انیس کے سیزن میں حبیب بنک کی ٹیم کی قیادت نہیں سونپی جائے گی۔
کچھ عرصہ قبل فیصل آباد میں منعقدہ پاکستان کپ کے دوران احمد شہزاد کا ڈوپ ٹیسٹ لیا گیا تھا اور ان کے خون کے نمونوں میں ممنوعہ ادویہ پائی گئی تھی۔
پاکستان کرکٹ بورڈ نے ڈوپ ٹیسٹ مثبت آنے پر پراحمد شہزاد کو چارج شیٹ جاری کی تھی جس کا احمد شہزاد نے جواب جمع کرا دیا تھا لیکن ابھی ان کے مقدمے کی سماعت کی تاریخ مقرر نہیں کی گئی۔
یاد رہے کہ پی سی بی کی جانب سے نئے سینٹرل کنٹریکٹ کا اعلان چند روزمیں متوقع ہے اور مثبت ڈوپ ٹیسٹ کے سبب احمد شہزاد کو سینٹرل کنٹریکٹ ملتا ہوا نظر نہیں آ رہا۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*